308

پاکستانی لڑکی جس نے ڈرائیورز کو جگا کر رکھنے اور حادثات سے بچانے والا چشمہ ایجاد کر دیا، قوم کا سرفخر سے بلند کردیا

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کی ایک ہونہار طالبہ نے ڈرائیورز کو جگا کر رکھنے اور حادثات سے بچانے والا چشمہ ایجاد کر دیا۔ ڈیلی پاکستان گلوبل کے مطابق بسمہ سولنگی نامہ 13سالہ طالبہ کراچی کے ایورگرین سیکنڈری سکول میںزیر تعلیم ہے، جس کی اس حیران کن ایجاد کی امریکہ کے خلائی تحقیقاتی ادارے ناسا کی طرف سے بھی ستائش کی گئی ہے اور امریکہ کے دورے پر مدعو کیا گیا ہے۔

سندھ کے ضلع سانگھر میں واقع گاﺅں فدا حسین ڈیرو کی رہائشی بسمہ سولنگی اور ان کی ٹیم کا بنایا ہوا یہ چشمہ دوران ڈرائیونگ نیند آ جانے پر ڈرائیور کو متنبہ کرے گا اور جگا دے گا۔ بسمہ سولنگی اور ان کی ٹیم میں شامل دیگر طالبات امریکہ کے دورے کے لیے کراچی ایئرپورٹ سے روانہ ہو گئی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں